سینیٹ الیکشن کیلئے کاغذات نامزدگی جمع کرانے کا وقت ختم

اسلام آباد: (میڈیا ون نیوز) سینیٹ الیکشن کیلئے کاغذات نامزدگی جمع کرانے کا وقت ختم ہونے کے بعد امیدواروں کے کوائف کی جانچ پڑتال شروع کر دی گئی ہے۔

تفصیل کے مطابق سینیٹ الیکشن کیلئے پہلا مرحلہ مکمل ہو گیا ہے۔ کاغذات نامزدگی جمع کرانے کے آخری روز بھی سیاسی جماعتوں کی جانب سے سندھ سے آج 14 امیدواروں نے کاغذات جمع کرائے۔

آج حکمران جماعت پاکستان تحریک انصاف کی جانب سے 9 امیدواروں نے کاغذات جمع کرائے۔ وفاقی وزیر فیصل واوڈا، سیف اللہ ابڑو، حنید لاکھانی، حسن بخشی، فضا ذیشان، سرینہ عدنان، ارم بٹ، محمود مولوی اور اشرف قریشی نے کاغذات جمع کرائے۔

جی ڈی اے کے پیر صدر الدین راشدی نے جنرل نشست جبکہ حسن بخشی نے ٹیکنوکریٹ نشست کیلئے کاغذات جمع کرائے۔

نعیم صدیقی ایڈووکیٹ نے ایم کیو ایم کے ڈپٹی کنوینر عامر خان کے کاغذات نامزدگی جمع کرائے جبکہ ایم کیو ایم کے نو امیدوار پہلے ہی کاغذات جمع کرا چکے ہیں۔

پیپلز پارٹی کی امیدوار فرزانہ بلوچ نے بھی کاغذات جمع کرا دیئے ہیں۔ پیپلز پارٹی کی جانب سے اب تک 13 امیدوار سندھ سے کاغذات جمع کرا چکے ہیں۔

میرپور خاص سے تعلق رکھنے والے علی جونیجو نے بطور آزاد امیدوار جنرل نشست پر کاغذات جمع کرائے۔ دوسری طرف پیپلز پارٹی کی جانب سے سینیٹ امیدوار پلوشہ خان کے خلاف وکلا نے الیکشن کمیشن میں درخواست جمع کرا دی ہے۔

اس درخواست میں کامران بلوچ ایڈووکیٹ نے موقف اختیار کیا ہے کہ پلوشہ خان کا ووٹ شیڈول جاری ہونے کے بعد کراچی میں رجسٹرڈ کرایا گیا۔ پلوشہ خان سندھ کی رہائشی نہیں، کاغذات مسترد کئے جائیں۔

اپنا تبصرہ بھیجیں